بلوچستان عوامی پارٹی اور پی ٹی آئی میں اختلافات کُھل کر سامنے آگئے

Sep 06, 2018

تحریک انصاف بلوچستان کے صوبائی سیکریٹری اطلاعات کی جانب سے جاری کئے گئے اعلامیے کے مطابق پی ٹی آئی بلوچستان کے صوبائی صدر سردار یار محمد رند کی زیر صدارت پی ٹی آئی کی صوبائی کابینہ اور صوبائی کونسل کا اجلاس تین گھنٹوں سے زائد دیر تک جاری رہا، اجلاس میں صوبائی کابینہ اور صوبائی کونسل نے صوبائی صدر سردار یار محمد رند کی قیادت پر اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے صوبائی حکومت اور بلوچستان عوامی پارٹی پر تحفظات، شدید تنقید اور ناراضگی کا اظہار کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ بلوچستان عوامی پارٹی نے الیکشن میں ہماری مخالفت کی اور ہر جگہ ہماری مخالفت میں امیدوار کھڑے کئے آج بلوچستان عوامی پارٹی ہماری اتحادی بن گئی ہے جس پر شدید تحفظات ہیں۔

پارٹی کی اکثریت نے یہ فیصلہ کیا کہ صوبائی کابینہ، صوبائی کونسل، تمام ڈویژنل اور اضلاع کے صدور جلد چیئرمین عمران خان سے ملاقات کرکے ان کے سامنے اپنے تحفظات کا اظہار کریں گے۔

علاوہ ازیں پی ٹی آئی بلوچستان کے پارلیمانی لیڈر سردار یار محمد رند نے پارلیمانی پارٹی کا اہم اجلاس آج طلب کرلیا ہے جس میں وہ پارلیمانی ممبران سے بھی مشاورت کریں گے۔

واضع رہے کہ بلوچستان حکومت کی اتحادیوں پی ٹی آئی اور بی اے پی کے درمیان من پسند وزارتوں کو لے کر اختلافات شروع ہی سے چل رہے تھے جو اب کُھل کر سامنے آگئے ہیں۔

PTI

balochistan government

Assembly Clash

BAP

sardar yaar mohammad rind

CM Jam kamal