لاہورہائی کورٹ نے میانی صاحب قبرستان میں پختہ قبریں بنانےپرپابندی لگادی

Aug 28, 2018
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2018/08/Miani-Sb-Graveyard-Lhr-Pkg-27-08.mp4"][/video]

لاہورہائي کورٹ نے ميانی  صاحب قبرستان ميں پختہ قبريں بنانے پر پابندي لگادي اور کہاکہ پختہ قبر مزيد دو قبروں کي جگہ گھير ليتي ہے۔شہريوں نے فيصلے کو خوش آئند قرار ديا ہے۔

لاہور ہائی کورٹ نےمياني صاحب قبرستان ميں پختہ قبر بنانے پر پابندي عائد کردی ہے۔ لاہورہائي کورٹ نےصدربار کي درخواست پرفيصلہ سنايا۔

جسٹس علي اکبرقريشي نے کہاکہ ضلعی انتظاميہ کو فوري طور پر ريٹ بورڈ بھي تبديل کرنے کا حکم ديا گيا ہے ۔ شہري کہتے ہيں کہ مياني صاحب قبرستان ميں  تدفين کے لئے جگہ حاصل کرنا  ناممکن ہوتا جارہا تھا ۔ عدالتي فيصلے سے صورتحال ميں بہتري آئے گي ۔واضح رہےکہ ميانی  صاحب قبرستان تاريخي اہميت کا حامل ہے اور دوماہ قبل لاہورہائي کورٹ کے حکم پر ہي قبرستان سے پختہ احاطے بھي مسمار کئے گئے تھے۔

Tabool ads will show in this div