آزادی کا جشن، کراچی اور لاہور کی سڑکوں پر ٹریفک جام، حادثات میں 3 جاں بحق

کراچی اور لاہور کے مختلف علاقوں میں بدترین ٹریفک جام نے جشن آزادی منانے والوں کو مشکل میں ڈال دیا، آزادی کا جشن منانے کیلئے پارکوں اور تفریحی مقامات پر جانے والے شہری ٹریفک جام میں پھنس گئے، ٹریفک حادثات میں 3 افراد کی جان چلی گئی جبکہ ون ویلنگ کرنے والے درجنوں افراد کو بھی حراست میں لے لیا گیا۔

یوم آزادی کا جشن منانے کیلئے شہریوں کی بڑی تعداد سڑکوں پر موجود ہے جس کے باعث مختلف شاہراہوں پر ٹریفک جام ہوگیا۔

نمائندہ سماء کے مطابق کار ساز، شارع فیصل، اسٹیڈیم روڈ، نمائش چورنگی، گرومندر پر گاڑیوں کی لمبی لمبی قطاریں لگی ہوئی ہیں۔

نیپا چورنگی سے گلشن چوری، سہراب گوٹھ فلائی اوور سے لکی ون مال، عائشہ منزل، واٹر پمپ، کلفٹن، سی ویو اور عبداللہ شاہ غازی کے مزار کے اطراف بھی سڑکوں پر ٹریفک جام ہے۔

یوم آزادی کا جشن منانے کیلئے خواتین اور بچوں کے ہمراہ لوگ مزار قائد، ساحل سمندر اور دیگر مقامات کا رخ کررہے ہیں تاہم ٹریفک جام ہونے کے باعث لوگوں کو اپنی منزلوں پر پہنچنے میں دشواری کا سامنا ہے۔

دوسری جانب ڈیفنس فیز ون کے قریب ٹریفک حادثے میں 2 افراد جاں بحق ہوگئے، نامعلوم گاڑی موٹر سائیکل سواروں کو ٹکر مار کر فرار ہوگئے، سہراب گوٹھ کے قریب بھی ٹریفک حادثے میں ایک شخص کی جان چلی گئی۔

شہر قائد کے علاوہ لاہور میں بھی سڑکوں پر جگہ جگہ منچلے جمع ہوگئے، اہم شاہراہوں پر ٹریفک کی روانی متاثر ہونے سے کئی مقامات پر ٹریفک جام ہوگیا۔

لاہور پولیس ک کہنا ہے کہ ون ویلنگ اور ہلڑ بازی کرنیوالے 18 نوجوانوں کو حراست میں لے لیا گیا۔

traffic jam

quaid e azam

STUDENTS

14th august

Naya Pakistan

Tabool ads will show in this div