ایم نائن موٹروے کی غیر معیاری تعمیر پر عدالت کا اظہار برہمی

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2018/08/Accident-Case-Khi-Pkg-08-08-ZOHAIB.mp4"][/video] سپریم کورٹ نے ایم نائن موٹروے کی غیر معیاری تعمیر پر برہمی کا اظہار کیا۔ عدالت نے چیئرمین این ایچ اے جواد رفیق کی سخت سرزنش کی ۔ جسٹس گلزار احمد نے ریمارکس دیئے اب ایک آدمی بھی مرا تو آپ لوگوں کے خلاف مقدمہ درج کرائیں گے ۔ سپریم کورٹ کی کراچی رجسٹری میں جامشورو ۔ سیہون روڈ پر حادثات سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی ۔ عدالت چیئرمین این ایچ اے سے کہا کہ آپ کا ادارہ پورا کرپٹ ہوچکا ہے ۔ ایم نائن کی تعمیر پر آپ کو شرم آنی چاہیے ۔ اب ایک آدمی بھی مرا تو آپ لوگوں کیخلاف مقدمہ درج کرائیں گے۔ چیئرمین این ایچ اے بولے ڈیزائن کی خامیوں کو دور کریں گے۔ عدالت نے ریمارکس دیئے، کچھ کرتے تو یہ حال نہ ہوتا۔ درخواست گزار سعید احمد کا کہنا تھا ایم نائن موٹر وے پر ایک سال میں ہزاروں افراد حادثے کا شکار ہوتے ہیں۔ ‎سپریم کورٹ کی چیئرمین این ایچ اے کو ایم نائن سے متعلق ایک ماہ میں رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی۔

karachi registry

justice gulzar ahmed

accident case

Chairman NHA

Tabool ads will show in this div