بلوچستان ہائی کورٹ نے نومنتخب رکن صوبائی اسمبلی کی شہریت سے متعلق کیس پرفیصلہ محفوظ کر لیا

بلوچستان ہائی کورٹ نے نومنتخب رکن صوبائی اسمبلی احمد علی کوہزاد کا شناختی کارڈ بلاک ہونے اور پاکستانی شہریت سے متعلق کیس پرفیصلہ محفوظ کر لیا ،نومنتخب ایم پی اے کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ انہیں شناختی کارڈ بلاک کرنے سے قبل کوئی نوٹس نہیں دیا گیا

 احمد علی کوہزاد کی  پاکستانی شہریت کیس کی سماعت بلوچستان ہائی کورٹ کے جسٹس نعیم اخترافغان اورجسٹس عبداللہ بلوچ پر مشتمل بینچ نے کی ،نو منتخب ایم پی اے  کے وکیل ہمایوں ترین ایڈوکیٹ، ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل ،ڈپٹی اٹارنی جنرل، نادرا کے لاءافیسر عدالت میں پیش ہوئے

عدالت کے استفسار پر نادرا کے لاء آفیسر نے بتایا کہ احمد علی کوہزاد کا برتھ سرٹیفیکیٹ انتیس جون دو ہزار چار میں بنایا گیا شناختی کارڈ بلاک کیس محکمہ داخلہ میں تاحال زیرالتواء ہے،نو منتخب ایم پی اے کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ ان کے موکل کو شناختی کارڈ بلاک کر نے سے قبل شوکاز نوٹس نہیں دیا گیا ،احمد کوہزاد یو نین کونسل ناظم رہ چکے ہیں جبکہ دو ہزار تیرہ کے الیکشن میں بھی حصہ لےچکے ہیں وکیل کی جانب سے  اپنے دلائل مکمل کر نے پر عدالت نے فیصلہ محفوظ کر لیا

SHOWCAUSE

NADRA

Balochistan High Court

Election 2018

Eelection Commission

Dual Nationality Case

NIC Block

Tabool ads will show in this div