بی سی سی آئی سربراہ این سری نواسن کو عہدہ چھوڑنے حکم

Nov 30, -0001

ویب ڈیسک:
ممبئی : بھارتی سپریم کورٹ نے بی سی سی آئی کے سربراہ این سری نواسن کو فوری طور پر عہدہ چھوڑنےکا مشورہ دیا ہے۔ بھارتی سپریم کورٹ نے آئی پی ایل کیس کی سماعت ستائیس مارچ تک ملتوی کردی۔

آئی پی ایل اسپاٹ فکسنگ کیس کیا پورس کا ہاتھی ثابت ہوگا جو اپنی ہی فوجوں پر چڑھ دوڑا تھا، عالمی کرکٹ پر حق ملکیت جتانے والا بھارتی کرکٹ بورڈ کی ساکھ اپنےہی ملک میں دائو پر ہے لگی ہوئی۔

آج ہونے والی سماعت میں بھارتی سپریم کورٹ نے واضح طور پر کہہ دیا کہ آئی پی ایل اسپاٹ فکسنگ اسکینڈل کی شفاف تحقیقات کےلئےاین سری نواسن کی عہدے سے دوری از حد ضروری ہے۔

این سری نواسن کے لئے اس مشورے پر عمل کرنا اتنا آسان بھی نہیں کیوں کہ داماد جی گروناتھ میاپن کی آواز کی تصدیق کردی ہے،فرانزک رپورٹس نے، اگرمیاپن پرسے دست شفقت ہٹا تو ٹینشن میں آکر گھر کا بھیدی کہیں لنکا ہی نہ ڈھادے۔

اس کیس میں بھارتی میڈیا کے مطابق کچہ پردہ نشنیوں کے بھی نام آتے ہیں، ایک بڑے بھارتی میڈیا گروپ سے کپتان ایم ایس دھونی کی قانونی جنگ کا آغازبھی ہوچکا ہے ، دھونی کا کیس مدراس ہائی کورٹ میں زیر سماعت ہے۔ آئی پی ایل پنڈورا بکس کھل چکا ہے، اب اس کی پٹاری سے روز بھارتی کرکٹ کے لئے شرمندگیوں کےنئے سامان ہورہے ہیں، ستائیس مارچ کو اگلی پیشی پر کیا پیش رفت ہوتی ہے ، اس کا فیصلہ تو آنے والا ہی وقت کرے گا لیکن کسی دل جلے کے مطابق اگر اسکی ہلکی سی جھلک بھی پاکستان کرکٹ میں دکھائی دے جاتی تو کرکٹ کے عالمی ایوانوں میں ایک طوفان کھڑا کردیا جاتا۔ سماء

آئی

پی

conditions

Tabool ads will show in this div