ایفی ڈرین کیس کافیصلہ5روزمیں سنائےجانےکےحکم پرحنیف عباسی سپریم کورٹ پہنچ گئے

حنیف عباسی نے ایفی ڈرین کیس کا فیصلہ پانچ روز میں کرنےکےلاہور ہائیکورٹ کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع کرلیا۔

حینف عباسی نے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کی جس میں موقف اختیار کیا کہ ہائیکورٹ نے غیرمتعلقہ فریق کی درخواست پر حکم دیا۔ درخواستگزار پر آرٹیکل دوسوتین کے تحت درخواست دینے پر پابندی ہے۔ ہائیکورٹ نے پابندی شدہ شخص کی درخواست پر رجسٹرار کے اعتراضات ختم کردیے۔

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا کہ ہنگامی نوعیت نہ ہونے کےباوجودلاہورہائیکورٹ نے کیس کوچھٹیوں میں سنا۔ٹرائل کورٹ نے کیس کو حتمی دلائل کیلئے دو اگست تاریخ مقرر کی ۔ دو اگست کی تاریخ پر کسی فریق نے اعتراض نہیں کیا۔درخواست گزار پچیس جولائی کےانتخابات میں بطور امیدوار حصہ لے رہا ہے۔ ہائیکورٹ فیصلے کے باعث درخواست گزار کی انتخابی مہم متاثر ہو گی۔ درخواست میں استدعا کی گئی کہ سپریم کورٹ کیس کو سولہ جولائی کو سماعت کیلئے مقرر کرے اورحتمی فیصلے تک ہائیکورٹ کے فیصلے پر حکم امتناع دے۔

Ephedrine Case

Hanif Abbassi

Tabool ads will show in this div