آرمی چیف نے 12 دہشت گردوں کی سزائے موت کی توثیق کردی

آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے 12 دہشت گردوں کی سزائے موت کی توثیق کردی۔ دہشت گرد متعدد حملوں میں ملوث تھے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق دہشت گرد 99افراد کے قتل میں ملوث پائے گئے ہیں۔ فوجی عدالتوں سے سزا پانے والے دہشت گردوں نے عدالت میں اپنے جرم کا اعتراف بھی کیا۔

 

ترجمان کے مطابق دہشت گرد سیکیورٹی فورسز، عام شہریوں اور تعلیمی اداروں پر حملوں میں بھی ملوث ہیں۔ واضح رہے کہ اس سے قبل 2 جولائی کو بھی آرمی چیف نے 12 دہشت گردوں کی سزائے موت کی توثیق کی تھی۔ 6 دہشت گردوں کو قید کی سزا بھی سنائی گئی ہے۔ سزا پانے والوں میں غنی رحمان، عبدالغازی، ضیاءالرحمان اور دیگر شامل ہیں، جب کہ محمد زبیر، عمر نواز ، ساجد خان ، ہیبت خان اور باز محمد کو موت کی سزا بھی سنائی گئی ہے۔

 

ترجمان کے مطابق اب تک 56افراد کو فوجی عدالتوں کے تحت پھانسی پر لٹکایا جا چکا ہے، 13دہشت گردوں کو آپریشن ردالفساد سے پہلے اور 43 دہشت گردوں کو آپریشن کے دوران پھانسی دی گئی ہے۔

 

آئی ایس پی آر کے مطابق اب تک فوجی عدالتوں سے231دہشت گردوں کو سزائے موت سنائی گئی، 167 دہشت گردوں کو قید کی سزا اور ایک ملزم فوجی عدالت سے بری ہوا۔ ان حملوں میں دہشت گردوں نے سیکیورٹی فورسز کے 92اہلکار اور شہری7شہری شہید کیے۔ مجرموں کے حملوں میں58افراد زخمی بھی ہوئے۔

TALIBAN

QAMAR JAVED BAJWA

Tabool ads will show in this div