پرویز مشرف کسی رعایت کے مستحق نہیں،اٹارنی جنرل کا عدالت میں جواب

Jun 12, 2018

پرویز مشرف عدالتی مفرور ہے، کسی رعایت کا مستحق نہیں، سرنڈر کرنے تک کوئی ریلیف نہ دیا جائے، ڈیکلریشن کی موجودگی تک نااہلی کا فیصلہ برقرار رہے گا، وفاقی حکومت نے سپریم کورٹ میں جواب جمع کروا دیا۔ سابق صدر کی اپیل ناقابل سماعت قرار دیکر خارج کرنے کی استدعا بھی کی گئی۔

اٹارنی جنرل آف پاکستان کی جانب سے سپریم کورٹ میں جمع کروائے گئے جواب میں موقف اپنایا گیا ہے کہ قانون کی نظر میں عدالتی مفرور کے کوئی حقوق نہیں ہوتے، سرنڈر کرنے تک مفرور کسی عدالتی ریلیف کا اہل نہیں ہوتا۔ پرویز مشرف پر ججز کو نظربند کرنے، میڈیا پر پابندیاں عائد کرنے اور عدالتی نظام کو تباہ کرنے کے الزامات ہیں۔

پرویز مشرف کو نااہل کرنے کا پشاور ہائی کورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ کے فیصلوں کے عین مطابق ہے،حالیہ عدالتی فیصلے کی روشنی میں آرٹیکل باسٹھ ون ایف کے ناہالی تاحیات تصورہوگی۔ وفاقی حکومت نے مشرف کی اپیل کو ناقابل سماعت قرار دیتے ہوئے خارج کرنے کی استدعا کی ہے۔

ELECTION

musharaf

Tabool ads will show in this div