اسٹیٹ بینک کی نئےکرنسی نوٹ فراہم کرنےکی سروس جاری

    

  بینک دولت پاکستان کی طرف سے عیدالفطر 2018ءکے موقع پر نئے نوٹ جاری کرنے کے متعلق شروع کی گئی ایس ایم ایس سروس کو عوام میں بھرپور پذیرائی حاصل ہوئی ہے۔

اسٹیٹ بینک عید کے موقع پر نئے کرنسی نوٹوں کے حصول کے لئے شروع کی گئی 8877 ایس ایم ایس سروس میں عوام کی دلچسپی کو سراہتا ہے۔ یہ سروس 31 مئی 2018ءکو شروع کی گئی تھی اور محض چار دنوں کی مختصر مدت میں تقریبا 2.3 ملین لوگوں نے 132 شہروں کی 1535 برانچوں پر کئے گئے انتظامات کے تحت بکنگ کرائی ہے۔ جبکہ گذشتہ عیدالفطر 2017ءکے موقع پر 120 شہروں کی 1018 نامزد برانچوں میں یہ سہولت فراہم کی گئی تھی۔ بکنگ کرانے کی مجموعی حد 2.7 ملین صارفین ہے جس میں رواں سال 50 فیصد تک اضافہ کیا گیا ہے جبکہ گذشتہ برس صارفین کی حد 1.8 ملین مقرر کی گئی تھی۔ اس نظام کی مجموعی گنجائش برانچوں کی جانب سے صارفین کی یومیہ تعداد کو یہ سہولت بہم پہنچانے اور ایس بی پی بینکنگ سروسز کارپوریشن کے پاس جمع شدہ دستیاب نئے کرنسی نوٹوں کے باعث محدود ہو جاتی ہے، کیونکہ یہ عمل نوٹوں کی چھپائی کی گنجائش سے منسلک ہوتا ہے۔ فی الوقت 85 فیصد سے زیادہ بکنگ عوام کو جاری کی جا چکی ہیں، چونکہ یہ بکنگ سروس چوبیس گھنٹے دستیاب ہوتی ہے، اس لیے توقع ہے کہ یہ نظام آئندہ چند روز میں اپنی مکمل حد تک پہنچ جائے گا۔ لہذا 2.7 ملین کا ہدف حاصل ہوتے ہی یہ بکنگ بند ہو جائے گی۔

اس بکنگ کو بتدریج ان شہروں میں بند کیا جائے گا جہاں برانچیں اپنی گنجائش کو استعمال کر چکی ہیں۔ تاہم پہلے سے جاری کردہ بکنگ کوڈز پر نئے کرنسی نوٹوں کا اجرا سروس کے آخری دن 14 جون 2018ءتک جاری رہے گاجوکوڈکےفعال ہونے سےمشروط ہوگا۔ جن برانچوں پر بکنگ ابھی تک دستیاب ہے ان کا اسٹیٹس اسٹیٹ بینک اور پی بی اے دونوں کی ویب سائٹس پر اپ ڈیٹ کیا جا رہا ہے۔

اسٹیٹ بینک نے عوام کو کہاہےکہ  وہ چارجزاور زحمت سے بچنے کے لیے ایس ایم ایس بھیجنے سے قبل اسٹیٹس ضرور چیک کر لیں۔ یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ ایس ایم ایس سروس کے علاوہ بینک اپنی برانچوں اور اے ٹی ایمز سے اپنے صارفین کو نئے نوٹ فراہم کر سکتے ہیں کیونکہ انہیں اسٹیٹ بینک کی جانب سے اس کی خاصی مقدار فراہم کی جا رہی ہے۔

New currency note

Tabool ads will show in this div