سندھ فیسٹیول، موئن جو دڑو میں جگہ جگہ گڑھے پڑ گئے، قدیم تہذیب کے آثار کو خطرہ

اسٹاف رپورٹ


کراچی : سندھ فیسٹیول کے بعد موئن جودڑو میں جگہ جگہ گڑھے پڑگئے اینٹیں اُکھڑ گئیں، دنیا کی قدیم ترین تہذیب کے آثار ثقافت کو روشناس کرانے کا بوجھ برداشت نہ کرسکے۔


دنیا کے قدیم ترین تاریخی مقام پر سندھ فیسٹیول کا اسٹیج سجا تو 5 ہزار سال قدیم تہذیب کے آثار بھی بوجھ برداشت نہ کرسکے۔


موئن جو دڑو پر فیسٹیول کی افتتاحی تقریب زور و شور سے ہوئی لیکن اس کے بعد ثقافتی فیسٹیول منانے والوں نے پلٹ کر بھی نہیں دیکھا، جگہ جگہ گڑھے پڑگئے، آتش بازی کیلئے لگائی جانے والی تیلیاں بھی وہیں نصب ہیں، کچھ اکھڑ جانے والی اینٹوں کو تو سیمنٹ لگا کر جوڑا گیا۔


نہ کوئی کھدائی ہوئی نہ ہی کوئی نقصان پہنچا، سندھ حکومت کی یقین دہانی حقیقت ثابت نہ ہوسکی، ماہرین اور شہری بھی کہتے ہیں فیسٹیول کیلئے جگہ کا تعین ٹھیک نہیں تھا۔


ثقافت کو روشناس کرانے کیلئے ایسا طریقہ اختیار کیا گیا جس میں دنیا بھر میں خطے کی پہچان کے وجود کو ہی داؤ پر لگادیا گیا ہو۔ سماء

میں

کے

کو

سندھ

georgia

Tabool ads will show in this div