پولیو قطرے پلانے سے انکار کرنے والے والدین کی تعداد8ہزارتک پہنچ گئی

اسٹاف رپورٹ


پشاور   :   پولیو قطروں سے انکاری والدین کو آمادہ کرنے کے لئے ضلعی انتظامیہ نے سرگرمیاں تیز کردی۔ پولیو قطروں سے انکاری والدین کی تعداد آٹھ ہزار تک پہنچ گئی ہے۔

پولیو وائرس کے خاتمے کے لئے حکومتی جتن جاری ہیں، خیبر پختونخوا میں گذشتہ سال متعارف کرائی گئی صحت کے انصاف مہم کی کامیابی کے بعد صحت کے اتحاد پروگرام میں وفاقی حکومت بھی شامل ہوگئی۔

اس مہم کے تحت کے پی کے اور فاٹا میں پولیو سے بچاو کے قطرے پلانے سے انکاری والدین کو راضی کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ مہم کے تیسرے مرحلے میں اعلی حکام دور افتادہ علاقے متنی  پہنچے اور والدین کو انسداد پولیو مہم میں شامل ہونے پر رضامند کیا۔

ضلعی حکام کا دعوی ہے پروگرام کے سبب لوگوں میں شعور اجاگر ہوا ہے، سات مرحلوں پر مشتمل صحت کا اتحاد مہم میں مئی تک جاری رہے گی، جس میں  پشاور سمیت بارہ حساس اضلاع ،تین ایجسنیوں اور دو ایف آرز کے پینتس لاکھ بچوں کا ہدف مقرر کیا گیا ہے۔ سماء

کرنے

کی

سے

ceo

brown

street

Tabool ads will show in this div