ن لیگ کاچیئرمین نیب کیخلاف قانونی کارروائی کا فیصلہ

 

مسلم لیگ ن نے نواز شریف کے خلا ف مبینہ منی لانڈرنگ کے الزام پر چیئرمین نیب کے خلاف قانونی کارروائی کا فیصلہ کرلیا۔ نواز شریف کہتے ہیں نیب کو وفاداریاں تبدیل کرنے کیلئے استعمال کیا جا رہا ہے۔ چیئرمین نیب کو ازخود استعفی دے دینا چاہئے۔

نواز شریف کی زیر صدارت مسلم لیگ ن کی سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی کے اجلاس میں چیئرمین نیب کی وضاحت مسترد کر دی گئی۔ میاں صاحب نے چیئرمین نیب کے خلاف عدالت جانے کا مشورہ قبول کرلیا۔ چیئرمین نیب کے خلاف قانونی کارروائی کا طریقہ کار قانونی ٹیم طے کرے گی۔

مزید پڑھیے: چیئرمین نیب کے معاملے پرپیچھے نہیں ہٹیں گے

سی ای سی اجلاس میں نواز شریف کا کہنا تھا کہ احتساب کے نام پر انتقامی کارروائیاں قبول نہیں۔ نیب متعصب اور جانبدار ثابت ہو چکا۔ چیئرمین نیب کو ازخود استعفی دے دینا چاہئے۔

اجلاس میں پارلیمانی بورڈ۔ الیکشن سیل اور منشور کمیٹی کی تشکیل کا فیصلہ بھی کیا گیا۔ وزیر اعظم نے فاٹا میں اصلاحات کے لئے مختلف تجاویز پیش کیں جبکہ پارٹی قائدین کو فاٹا میں ریفرنڈم کرانے کی رائے پر اعتماد میں لیا گیا۔

مزید پڑھیے:  چیئرمین نیب 24 گھنٹے میں شواہد دیں یا معافی مانگیں

یاد رہے کہ ناراض رکن چودھری نثار کو ن لیگ نے اجلاس میں مدعو نہیں کیا گیا۔

PML N

Chairman NAB

CEC Meeting

Tabool ads will show in this div