نوازشریف جلسے نہ کریں تو کیا کریں

سربراہ عوامی مسلم لیگ شيخ رشيد احمد نے عام انتخابات میں تاخیرکا خدشہ ظاہرکردیا۔ احسن اقبال پر حملے کو بری بات قراردیتے ہوئے نواز شریف کے جلسے کرنے کو اچھی بات قرار دے دیا۔

لندن سے وطن واپسي پرلاہورميں ميڈيا سے گفتگو کے دوران شیخ رشید نے نارووال میں وزیرداخلہ احسن اقبال پرحملے کو بری بات قرار دیتے ہوئے گزشتہ رات کراچی میں پی ٹی آئی اور پاکستان تحریک انصاف کے کارکنوں کے درمیان تصادم کی پرزور مذمت کردی۔

بولے کہ کراچی میں جو کچھ ہوا اس کی پرزور مذمت کرتا ہوں۔ اگر اسی طرح تلخیاں بڑھتی رہیں اورکوئی چھوٹا یا بڑاحادثہ ہواتوخدشات ہیں کہ انتخابات میں ایک، دوماہ کی تاخیر ہو سکتی ہے۔

نواز شریف کی جانب سے پے در پے جلسے کرنے سے متعلق سوال کے جواب میں شیخ رشید نے کہا کہ پانچ سال لوگ انتظار کرتے رہے کہ جاتی امرا کا دروازہ کھلے تو اب اگر نواز شریف نے جلسے کرنا شروع کیے ہیں تو یہ بہت اچھی بات ہے۔ جو کچھ انہوں نے کیا اب جلسے کرنا ان کا حق ہے۔

شیخ رشید نے سابق وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار کو نشانے پر رکھتے ہوئے کہا کہ پاکستان کے پاس پیسہ بالکل نہیں ہے۔ قرضے ادا کر کرنا مشکل ہو رہا ہے لیکن ہمیں شو مارنے کا شوق ہےتو اب اسحاق ڈاروطن واپس آئیں اور آکرصورتحال کا سامنا کریں۔

SHAIKH RASHEED

PTI PPP Clash

Tabool ads will show in this div