سابق اولمپیئن منصور علی خان کا پاکستان میں ہارٹ ٹرانسپلانٹ کرانے سے انکار

سابق اولمپیئن اور ہاکی لیجنڈ منصور علی خان نے پاکستان میں منصوعی دل لگوانے سے انکار کردیا، کہتے ہیں میری خواہش ہے کہ دل کا آپریشن بھارت میں ہو۔

پاکستان ہاکی لیجنڈ گول کیپر منصور علی خان دل کے عارضے میں مبتلا ہیں، ان کے دل میں پیس یکر نصب ہے تاہم ان کے پھپھڑے اور گردے بھی شدید متاثر ہورہے ہیں۔

سابق اولمپیئن نے پاکستان میں مصنوعی دل لگوانے سے انکار کردیا، ان کی ضد ہے کہ ہارٹ ٹرانسپلانٹ بھارت میں ہو۔

تفصیلات جانیں : پاکستان ہاکی کےہیرومنصورکوڈاکٹرزنےہارٹ ٹرانسپلانٹیشن کامشورہ دےدیا

سماء کے نمائندہ سے گفتگو کرتے ہوئے منصور نے کہا کہ میری خواہش ہے دل کا آپریشن بھارت میں ہو، پاکستان میں سہولتیں نہیں، 6 ماہ سے ایک سال لگ سکتا ہے، پاکستانی ڈاکٹرز میکینکل ہارٹ لگانا چاہتے ہیں۔

ڈاکٹرز کے مطابق منصور کے دل نے 80 فیصد تک کام کرنا چھوڑ دیا ہے، جس کے باعث ہاکی اسٹار کافی عرصہ سے شدید تکلیف کا شکار ہیں، مرض کی شدت کے باعث دیگر اعضاء پر بھی اس کا برا اثر پڑ رہا ہے۔

مزید جانیے : شاہد آفریدی کی گھر جاکر منصور علی خان کی عیادت، مکمل علاج کرانے کا اعلان

پاکستانی اسٹار کرکٹر شاہد آفریدی نے بھی معروف ہاکی گول کیپر کی عیادت کرکے ان کے علاج کے تمام اخراجات برداشت کرنے کا اعلان کیا تھا، بوم بوم آفریدی کا کہنا تھا کہ علاج پاکستان میں ہو یا بیرون ملک ہر طرح سے منصور کی مدد کریں گے۔

HEALTH

HEART

Olympian

Mansoor Ali Khan

Tabool ads will show in this div