دورجدید میں بھی کولہوکےبیل کی اہمیت

راول پنڈی: کولہوکےبیل کا ذکر آپ نے کہاوتوں میں تو بہت سنا ہوگا لیکن حقیقت میں کولہو کابیل کسی دور دراز دیہات میں نہیں بلکہ شہر کے بیچوں بیچ بھی چلتاہے۔

تیز رفتار مشینی دور میں کوہلو کی قدیم مشین ویسے تو قصوں کہانیوں میں ہی رہ گئی مگر یہ کولہو آج بھی چلتا ہے۔سیاہ رنگ کا تگڑا بیل روزانہ گھنٹوں یہ کولہو کھینچتا ہے۔ سرسوں اوردیگراجناس کاخالص تیل اپنی آنکھوں کے سامنے نکلوانے کے لیے شہری اس کوہلوپرآنکھیں بند کرکے یقین کرتے ہیں۔کچھ لوگوں کے لیے یہ ضرورت ہے تو کسی کے لیے ماضی کی خوبصورت روایت کاعکاس ہے۔

کوہلو کے مالک کی نظر میں یہ اس کے لیے صرف کاروبار ہی نہیں  ثقافت سے جڑے رہنے کا ذریعہ بھی ہے۔

بیل کا اٹھتا ہر قدم اس کے مالک کے لیے خوشحالی لاتاہے۔تیل کاقطرہ قطرہ اگرچہ دریا تو نہیں بناتا مگر شام تک مالک کو اپنی اور بیل کی محنت کا کافی صلہ مل جاتا ہے۔

ہمیشہ ایک ہی مدارمیں گھومتےکولہوکےبیل کایہ سفرہرگز رائیگاں نہیں بلکہ اسی کے دم سے روزانہ منوں تیل نکلتا ہے۔

Tabool ads will show in this div