پاکستان کا امریکا سے تعلقات کا ازسرنو جائزہ، امریکا نے اعتراف کرلیا

اسٹاف رپورٹ
واشنگٹن : امریکی حکام کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ پاکستان نے امریکا پر واضح کر دیا ہے کہ وہ امریکا سے تعلقات کا از سر نو جائزہ لے رہا ہے۔

امریکی اخبار نے امریکی اعلیٰ حکام کے حوالے سے دعویٰ کیا ہے کہ پاکستان کے رویئے میں 26 نومبر کے نیٹو حملے کے بعد جو تبدیلی آئی ہے اس کے باعث تعلقات کا از نو جائزہ لیا جا رہا ہے۔

امریکی حکام کا کہنا  ہے کہ پاک امریکا تعلقات کسی نہ کسی طور جاری رہیں گے۔انہوں نے کہا جب تک پاکستان اپنا جائزہ مکمل نہ کرلے وہ کچھ نہیں کہہ سکتے کہ آئندہ تعلقات کیسے ہوں گے۔

انہوں نے کہا نیٹو حملے کے فوری بعد پاکستان نے افغانستان میں موجود غیر ملکی فوجوں کو اپنی سرزمین سے سپلائی بند کر دی جس کے بعد امریکا کا خرچ بڑھ گیا ہے۔


دوسری جانب امریکا کو پاکستان میں موجود اپنے اہل کاروں کی تعداد بھی کم کرنا پڑی جو غیر سفارتی اور مشکوک سرگرمیوں میں ملوث تھے۔ ادھر امریکا نے پاکستان کی امداد میں بھی کٹوتی کرتے ہوئے امداد میں واضح کمی کی ہے۔ سماء/ایجنسیز

کا

سے

نے

کرلیا

Bhutto

decision

paper

Tabool ads will show in this div