زینب قتل کیس؛ڈاکٹرشاہدمسعودکےالزامات جذباتی ڈائیلاگ نکلے

 

اسلام آباد: زینب قتل کیس میں جھوٹے الزامات کا معاملہ منطقی انجام کےنزدیک پہنچ گیا۔ڈاکٹر شاہد مسعود کے بڑے بول کا پول کھل گیا۔ان کےتمام الزامات محض جذباتی ڈائیلاگ نکلے۔نجی ٹی وی کے اینکر نے عدالت میں جواب جمع کرادیا۔

سپریم کورٹ میں زینب قتل ازخودکیس کی سماعت ہوئی۔ ڈاکٹرشاہد مسعود کے وکیل نے ان کی جانب سے جواب عدالت میں جمع کرایا جس میں کہا گیا ہے کہ قصور کے واقعہ پر وہ بطور باپ جذباتی ہوگئے تھے۔ انھوں نے بیان میں کہاکہ یقین دلاتا ہوں کہ آئندہ اس طرح کا بیان دیتے ہوئے محتاط رہوں گا۔ جواب میں کہا گیا ہے کہ الزامات کی سچائی پتہ چلانے کا مینڈیٹ کمیٹی کو عدالت نے دیا۔کمیٹی کی فائنڈنگ کی صداقت پر کوئی بات نہیں کرسکتا۔ کمیٹی نے رپورٹ میں جو کہااس کی تردید نہیں کرتا۔کمیٹی کی فائنڈنگ پر مقدمہ لڑنا نہیں چاہتا۔

جواب میں ڈاکٹر شاہد مسعود نے ایک بار پھر یہی راگ الاپ دیا کہ انہیں مجرم عمران علی کے بینک اکاؤنٹس کے حوالے سے معلومات ملیں اور مجرم کے بااثر افراد سے تعلقات کی بھی اطلاع ملی۔ سماء

zainab murder case

Shahid Masood

Tabool ads will show in this div