ملائیشیا کا لاپتا طیارہ،معاون پائلٹ کا کردار مشکوک بن گیا

کوالالمپور : گیارہویں روز بھی لاپتہ ملائیشین طیارے کا سراغ نہ مل سکا، عالمی میڈیا کی نئی رپورٹس میں معاون پائلٹ کا کردار مشکوک بتایا جا رہا ہے۔

ملائشین طیارے نے اڑان بھری اور پھرکچھ پتا نہ چل سکا کہ وہ کہاں گیا؟ بس جتنے منہ اتنی باتیں، تفتیش کا دائرہ اب معاون پائلٹ کے گرد گھومنے لگا۔ آل رائٹ، گڈ نائٹ، فلائٹ ایم ايچ 370 سے آنے والے یہ آخری الفاظ پائلٹ ظہری احمد شاہ کے نہیں بلکہ ان کے معاون عبدالحامد نے ادا کیے تھے۔

یہ پیغامات اس وقت جاری کیے گئے جب پیغام رساں کمپیوٹر نے کام کرنا بند کردیا تھا، برطانوی اخبار میں شائع ایک تصویر میں عبدالحامد کو سیاسی نشان بناتے دکھایا گیا ہے۔ گھر کی تلاشی کے دوران برآمد ہونے والا سیمیولیٹر بھی شکوک بڑھارہا ہے۔

مغربی میڈیا میں قیاس آراییاں جاری ہیں اورتانے بانے جہادی تنظیموں سے جوڑنے کی کوششیں ہو رہی ہیں، لیکن ملائشین صحافی جہاں بار صادق اس کی تردید کرتے ہیں۔ ان کا اصرار ہے کہ معاون پائلٹ عبدالحامد کا کسی سیاسی یا مذہبی جماعت سے کوئی تعلق نہیں تھا۔ سماء

rice

Tabool ads will show in this div