یوکرین : سرکاری فوج سے جھڑپ، 20 روس نواز علیحدگی پسند ہلاک، کئی زخمی

ویب ایڈیٹر

کیف : یوکرین کے شہر مریو پول میں سرکاری فوج سے جھڑپ کے دوران 20 روسی نواز علیحدگی پسند ہلاک ہوگئے، ایک فوجی جوان بھی جان سے گیا، واقعے میں کئی افراد زخمی بھی ہوئے ہیں۔

وزیر داخلہ ارسان اواکوف کا کہنا ہے کہ روسی نواز علیحدگی پسندوں نے پولیس ہیڈ کوارٹر پر قبضہ کررکھا تھا، فورسز نے کارروائی کرتے ہوئے 20 علیحدگی پسندوں کو مار گرایا جبکہ جھڑپ میں ایک فوجی اہلکار بھی ہلاک ہوا۔

ان کا کہنا ہے کہ فوجی کارروائی کے نتیجے میں بہت سے علیحدگی پسند فرار ہوکر محفوظ پناہ گاہوں میں چھپ گئے ہیں۔

یوکرین کا سیاسی بحران روسی نژاد آبادیوں میں خانہ جنگی کی صورت اختیار کرچکا ہے، مشرقی ساحلی شہر مریو پول میں یوکرین کی فوج نے پولیس ہیڈکوارٹرز پر قابض علیحدگی پسندوں کیخلاف آپریشن کیلئے پیشقدمی کی تو زبردست مزاحمت کا سامنا ہوا۔

پولیس ہیڈ کوارٹرز اور مقامی وزارت داخلہ کے دفاتر فوج اور علیحدگی پسندوں کے درمیان جھڑپوں کا مرکز تھے، اس دوران ہیڈ کوارٹرز کی عمارت میں آگ بھی لگ گئی۔ سماء

زخمی

registered

nobel

Tabool ads will show in this div