صیہونی فوج کی وحشیانہ فائرنگ2 فلسطینی شہید

An Israeli soldier stands guard as Palestinian school children protest against checkpoint rules imposed by Israeli forces around their school in the divided city of Hebron, in the Israeli-occupied West Bank, on October 11, 2011. AFP PHOTO / HAZEM BADER (Photo credit should read HAZEM BADER/AFP/Getty Images)
An Israeli soldier stands guard as Palestinian school children protest against checkpoint rules imposed by Israeli forces around their school in the divided city of Hebron, in the Israeli-occupied West Bank, on October 11, 2011. AFP PHOTO / HAZEM BADER (Photo credit should read HAZEM BADER/AFP/Getty Images)
An Israeli borderguard takes aim during clashes with Palestinian demonstrators following a protest in support of Palestinian prisoners on hunger strike in Israeli jails, near the Jewish settlement of Beit El, north of the West Bank city of Ramallah on May 11, 2017.  / AFP PHOTO / ABBAS MOMANI
An Israeli borderguard takes aim during clashes with Palestinian demonstrators following a protest in support of Palestinian prisoners on hunger strike in Israeli jails, near the Jewish settlement of Beit El, north of the West Bank city of Ramallah on May 11, 2017. / AFP PHOTO / ABBAS MOMANI

اتل ابیب : اسرائیلی فوج کی وحشیانہ فائرنگ سے دو بے گناہ فلسطینی شہید ہوگئے۔ اسرائیلی آرمی کی جانب سے غزہ کے متنازعہ علاقے پر حملہ کیا گیا۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کی جانب سے جاری اطلاعات کے مطابق فلسطین کے متنازعہ علاقے غزہ میں اسرائیلی فوج کی جانب سے حملے اور فائرنگ میں دو فلسطینی شہید ہوگئے۔ اسرائیلی فوجیوں کی جانب سے حملہ اہل کاروں پر حملے کے بعد کیا گیا۔

غزہ میڈیکل ذرائع کے مطابق اسرائیلی فوجیوں پر فلسطینیوں کی جانب سے سڑک کنارے نصب بارودی مواد سے حملہ کیا گیا، جس میں متعدد اسرائیلی فوجی زخٕی ہوئے۔

وزارت صحت غزہ کی جانب سے شہید ہونے والے فلسطینیوں کی شناخت ظاہر کردی گئی ہے۔ میڈیکل ذرائع کے مطابق شہید ہونے والوں میں سلام صبہا اور عبداللہ ابو شیخا شامل ہیں۔ دونوں نوجوانوں کی عمریں سترہ سال تھیں۔ دونوں نوجوانوں کو جنوبی غزہ کے علاقے رافع میں نشانہ بنایا گیا۔

عینی شاہد کے مطابق دونوں نوجوانوں کو سرحد کے قریب گولیوں سے نشانہ بنایا گیا۔ دوسری جانب اسرائیلی فوج کا کہنا ہے کہ سیکیورٹی اہل کاروں کی جانب سے فلسطینی لڑکوں کو وارننگ جاری کی گئی تھی کہ وہ بارڈر فینس کے قریب نہ آئے، تاہم وہ مشکوک انداز میں آگے بڑھتے چلے گئے، جس کے بعد مجبورا اسرائیلی فوج کو فائرنگ کرنا پڑی۔

واضح رہے کہ فلسطینیوں کی شہادت ایک ایسے وقت میں سامنے آئی ہے، جب اسرائیل کی جانب سے حماس کے خفیہ ٹھکانوں پر فضائی حملوں کا آغاز ہوا ہے، اسرائیلی فوج اب تک فضائی حملوں میں حماس کے اٹھارہ ٹھکانوں پر حملے کرچکی ہے۔ جب کہ ان حملوں کے ردعمل میں صہیونی فوج پر حملے میں چار فوجی معمولی زخمی ہوئے۔ سماء

SOLDIERS

GAZA STRIP

Tabool ads will show in this div