افسوس پولش کوہ پیما کے ملنے کی تمام امیدیں ختم ہوگئیں

گلگت بلتستان/ اسلام آباد : نانگا پربت پر پھسنے پولش کوہ پیما کے ملنے کی امیدیں ختم ہوگئیں، پولش سفیر کا کہنا ہے کہ توماس مسکیویچ کی زندگی کی تمام اُمیدیں دم توڑ چکی ہیں۔

اسلام آباد میں صحافیوں سے گفت گو میں پاکستان میں تعینات پولینڈ کے سفیر نے پولینڈ کے کوہ پیما توماس مسکیویچ کے نانگا پربت سر کرنے کے دوران لاپتا ہونے پر میڈیا بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ موسم کی شدت اور خرابی کے باعث امدادی آپریشن روک دیئے گئے ہیں۔

پولش سفیر کا مزید کہنا تھا کہ افسوس ہے کہ توماس مسکیویچ کی زندگی کی تمام اُمیدیں دم توڑ چکی ہیں، طبی لحاظ سے 7ہزار میٹرز سے زیادہ اونچائی پر اتنی دیر تک بچنا ممکن نہیں۔

پیوتر اوپلیانسکی کا مزید کہنا تھا کہ فرانسیسی کوہ پیما کی حالت بہتر ہے، جسے اسلام آباد منتقل کردیا گیا ہے، الزبیتھ ریوو کی حالت خطر ے سے باہر ہے، تاہم وہ زخمی ہیں۔

واضح رہے کہ فرانسیسی خاتون کوہ پیما کو ہفتہ کے روز پاکستان آرمی اور دیگر کوہ پیما ٹیم کے ہمراہ ریسکیو کیا گیا تھا۔ پاکستانی حکام کے مطابق پاکستانی فوجی ہیلی کاپٹرزنے6700میٹرکی بلندی پرالزبتھ کو ڈھونڈا تھا۔

ریسکیو ٹیم کے دو ارکان نے6700 کی بلندی پرچڑھ کر فرانسیسی کوہ پیما الزبتھ ریوول کو ریسکیوکیا۔ غیر ملکی کوہ پیماؤں کو نکالنے کے لئے آرمی ایوی ایشن کے ہیلی کاپٹرز نے جمعہ کو آپریشن شروع کیا تھا اور پولش کوہ پیماٹیم کو نا نگا پربت پہنچایا تھا۔

خراب موسم اور برفانی ہواؤں کے باعث دو غیر ملکی کوہ پیما نانگا پربت میں 7 ہزار 400 میٹر کی بلندی پر پھنس گئے تھے ۔ دونوں کوہ پیماؤں نے سیٹلائٹ فون کے ذریعے مدد کا پیغام بھیجا تھا۔ سماء

rescue operation

MOUNTAIN

SKARDU

Nanga Parbat

KILLER MOUNTAIN

frenchwoman

Tabool ads will show in this div