دس سال سےاقتدارپربراجمان پاکسےکوشکست،نئےصدرآج حلف اٹھائیں گے

اسٹاف رپورٹ


کولمبو   :   سری لنکا میں تقریباً دس سال سے اقتدار میں رہنے والے صدر مہندا راجہ پاکسے نے صدارتی انتخابات میں اپنی شکست تسلیم کرلی۔

سری لنکا میں دس سال بعد اقتدار میں تبدیلی آگئی، انتخابی نتائج کے بعد ایک دہائی تک اقتدار کے مزے لینے والے مہندا راجا پاکسے ماضی کے اتحادی سے شکست کھا گئے۔ صدراتی ترجمان  کے مطابق راجہ پکاسے نے حزب اختلاف سے ملاقات میں اقتدار کی پرامن منتقلی کو یقینی بنانے کا عزم کیا ۔

ابتدائی نتائج کے مطابق میتھرئی پالا سریسینا نے اکیاون فیصد ووٹ حاصل کئے ہیں، راجہ پاکسے اور میتھرئی پالا تین ماہ پہلے تک ایک دوسرے کے اتحادی تھے۔ راجہ پاکسے کی شکست میں مسلمانوں کے ووٹوں کا کردار اہم رہا، جب کہ دیگر اقلیتوں نے بھی سابق وزیر صحت میتھرئی کو ووٹ دیئے۔
 
صدراتی ترجمان کے مطابق راجہ پکشے نے سرکاری رہائش گاہ خالی کردی، نئے صدر آج شام حلف اٹھائیں گے،سبکدوش صدر راجہ پاکسے دو ہزار چار میں وزیراعظم بنے  دوہزار پانچ کے صدراتی انتخابات میں انہیں فتح ہوئی، آخری بار سال دوہزار دس میں فوج کے سابق سربراہ سارتھ فونیسکا کو شکست دی۔ سماء

games

Tabool ads will show in this div