Tuesday, May 17, 2022  | 1443  شوّال  15

ہتک عزت کیس، جونی ڈیپ کی سابقہ محبوبہ بھی گواہی دینگی

SAMAA | - Posted: May 14, 2022 | Last Updated: 3 days ago
Posted: May 14, 2022 | Last Updated: 3 days ago

جانی ڈیپ اور امبر ہرڈ کے ہتک عزت کے مقدمے کی عدالتی کارروائی پیر 16 مئی کو ہوگی جس میں اداکارہ ایلن بارکن اور امبر ہرڈ کی بہن وٹنی ہنریکوز عدالت میں گواہی دیں گی۔

رپورٹ کے مطابق ایلن بارکن اداکار جونی ڈیپ کے ساتھ تعلقات میں تھیں وہ ویڈیو لنک کے ذریعے امبر ہرڈ کے لیے گواہ کے طور پر عدالت میں گواہی دینگی جبکہ امبر ہرڈ کی بہن وٹنی کو ذاتی طور پر عدالت میں بلایا جائے گا۔

ہنریکوز اور بارکن دونوں اس سے قبل برطانوی ٹیبلائڈ دی سن کے خلاف بھی امبر ہرڈ کی جانب سے گواہی دے چکی ہیں ۔

دریں اثنا جونی ڈیپ بھی ایک بار پھر عدالت میں پیش ہوکر امبر ہرڈ کی قانونی ٹیم کے جرح کا سامنا کریںگے۔

گزشتہ روز ایک رپورٹ سامنے آئی جس کے مطابق قانونی ماہرین کا کہنا ہے کہ ہتک عزت کے مقدمے میں امبر ہرڈ کے خلاف جونی ڈیپ کی جیت کا امکان مشکل ہے۔

قانونی ماہرین کا خیال ہے کہ گواہوں اور شواہد کے علاوہ عدالت میں جونی ڈیپ اور امبر ہرڈ کے تاثرات بھی فیصلے میں بہت بڑا کردار ادا کر سکتے ہیں۔

امبر ہرڈ کا بیان

امبر ہرڈ نے 5 مئی کو بیان حلفی میں جیوری کو بتایا کہ سابق شوہر نے شادی کے چند ماہ بعد ہی آسٹریلیا کے دورے کے دوران انہیں بدترین جنسی استحصال کا نشانہ بنایا، 2015 کے آغاز میں جب وہ جونی ڈیپ کے ہمراہ آسٹریلیا گئیں تو اس وقت ان کی شادی کو کچھ ہی ماہ گزرے تھے اور انہیں اس طرح کے استحصال اور تشدد کی امید نہیں تھی۔

اداکارہ نے بتایا کہ آسٹریلیا میں جونی ڈیپ کی فلم ’پائریٹس آف کیریبیئن 5‘ کی شوٹنگ جاری تھی، جہاں اس نے انہیں نشے کی حالت میں بدترین جنسی استحصال کا نشانہ بنایا، شوہر نے شراب پینے کے بعد کمرے میں رات کے کھانے سے قبل ان پر تشدد کیا، انہیں کھانا تک کھانے نہیں دیا، انہیں بے لباس کردیا جب کہ شراب کی بوتل سے ان کا بدترین جنسی استحصال کیا۔

جونی ڈیپ کا بیان

ان سے قبل جونی ڈیپ نے بھی متعدد دنوں نے تک عدالت میں اپنا بیان ریکارڈ کروانے سمیت امبر ہرڈ کے وکلا کو جرح کے دوران جوابات بھی دیے تھے، جونی ڈیپ نے جرح کے دوران امبر ہرڈ پر تشدد کےتمام الزامات مسترد کیے تھے اور دعویٰ کیا تھا کہ اُلٹا سابق اہلیہ ان پر تشدد کرتی تھیں۔

دوران جرح جونی ڈیپ نے اعتراف کیا تھا کہ وہ شراب نوشی سمیت دیگر نشہ کرتے رہے ہیں مگر اس سے ان کے کسی بھی رشتے دار یا دوست کو کبھی کوئی نقصان نہیں پہنچا۔

جونی ڈیپ کے علاوہ ان کے چند گواہوں بشمول ان کی بڑی بہن اور ان کی جانب سے ملازمت پر رکھی گئی ایک نفسیاتی ماہر خاتون بھی عدالت میں پیش ہو چکی ہیں۔

جونی ڈیپ کی جانب سے دائرہ کردہ مذکورہ کیس کا ٹرائل 13 اپریل سے ریاست ورجینیا کی کاؤنٹی فیئر فیکس کی عدالت میں شروع ہوا تھا، مذکورہ ٹرائل کی سماعتیں 6 سے 8 ہفتوں تک چلنے کا امکان ہے اور ممکنہ طور پر جولائی کے اختتام یا اگست 2022 کے وسط تک کیس کا فیصلہ سنایا جائے گا۔

کیس میں کب کیا ہوا؟

امریکی ریاست ورجینیا کی کاؤنٹی فیئر فیکس میں چلنے والا کیس دراصل جونی ڈیپ کی جانب سے دائر کی گئی ہتک عزت کی درخواست کا مقدمہ ہے، جس میں انہوں نے سابق اہلیہ امبر ہرڈ کے خلاف 5 کروڑ ڈالر ہرجانے کا دعویٰ دائر کر رکھا ہے۔

مذکورہ مقدمہ جونی ڈیپ نے مارچ 2019 میں سابق اہلیہ امبر ہرڈ کی جانب سے اخبار میں مضمون لکھنے کے بعد دائر کیا تھا۔

جونی ڈیپ کی سابق اہلیہ نے معروف اخبار واشنگٹن پوسٹ میں خواتین پر گھریلو تشدد، انہیں گھریلو جنسی ہراسانی کا نشانہ بنائے جانے پر ایک مضمون لکھا تھا۔

امبر ہرڈ نے اپنے مضمون میں امریکی حکومتی اداروں سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ خواتین کو گھریلو تشدد، گھریلو جنسی ہراسانی اور استحصال سے بچانے کے لیے مزید سخت اقدامات اٹھائیں، وہ کافی عرصے تک گھریلو جنسی استحصال، تشدد اور ہراسانی کا شکار رہیں اور معروف ہونے کے باوجود وہ اس معاملے پر کھل کر بات نہیں کرسکیں۔

اداکارہ نے اپنے مضمون میں سابق شوہر جونی ڈیپ کا نام استعمال نہیں کیا تھا تاہم ان کا اشارہ ان کی جانب ہی تھا۔

مضمون شائع ہونے کے بعد جونی ڈیپ پر تنقید بڑھ گئی تھی اور ان کا کیریئر بھی خطرے میں پڑگیا تھا، جس کے بعد انہوں نے مارچ 2019 میں امبر ہرڈ کے خلاف 5 کروڑ ڈالر کے ہرجانے کا دعویٰ دائر کیا تھا، جس کے جواب میں امبر ہرڈ نے بھی ان پر 10 کروڑ ڈالر ہرجانے کا دعویٰ دائر کیا تھا۔

خیال رہے کہ امبر ہرڈ اور جونی ڈیپ کے درمیان 2011 میں تعلقات استوار ہوئے تھے اور دونوں نے فروری 2015 میں شادی کی تھی۔

شادی کے 15 ماہ بعد امبر ہرڈ نے مئی 2016 میں جونی ڈیپ پر تشدد کے الزامات عائد کرتے ہوئے طلاق کے لیے عدالت سے رجوع کیا تھا اور دونوں کے درمیان 2017 میں طلاق ہوگئی تھی۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube