Wednesday, May 18, 2022  | 1443  شوّال  16

تائیوان:ایٹمی ہتھیاروالےچینی طیاروں کی دفاعی زون میں پروازیں

SAMAA | - Posted: Oct 2, 2021 | Last Updated: 8 months ago
SAMAA |
Posted: Oct 2, 2021 | Last Updated: 8 months ago

تائیوان کے وزارت دفاع کے ترجمان کا کہنا ہے کہ یکم اکتوبر کو 38 چینی فوجی طیاروں نے اس کے دفاعی زون میں اڑانیں بھریں جو بیجنگ کی طرف سے اب تک کا سب سے بڑا حملہ ہے۔

وزارت دفاع نے کہا کہ مذکورہ طیاروں میں ایٹمی صلاحیت رکھنے والے بمبار طیارے بھی شامل تھے جو دو مرحلوں میں تائیوان کی فضائی دفاعی علاقے میں داخل ہوئے۔

ترجمان کے مطابق تائیوان نے اپنے جیٹ طیاروں اور میزائل سسٹم کی مدد سے اپنا دفاع کیا۔

بی بی سی کے مطابق تائیوان کے وزیراعظم سو سینگ چانگ نے آج صحافیوں سے گفتگو میں کہا کہ چین فوجی جارحیت میں علاقائی امن کو نقصان پہنچا رہا ہے۔

چینی حکام کا اس قسم کے واقعات سے متعلق موقف ہے کہ ایسی پروازیں اس کی خودمختاری کی حفاظت کے لیے ہیں۔

فضائی دفاعی شناختی زون کسی بھی ملک کے علاقے اور فضائی حدود سے باہر کا علاقہ ہوتا ہے لیکن یہاں آنے والے غیر ملکی طیاروں کو شناخت نگرانی اور قومی سلامتی کے مفاد میں کنٹرول کیا جاتا ہے۔

واضح رہے کہ چین تائیوان کو اپنا حصہ سمجھتا ہے جبکہ تائیوان خود کو ایک خود مختار ریاست سمجھتا ہے۔

چین اور تائیوان سن 1940 کی دہائی میں خانہ جنگی کے دوران تقسیم ہوئے مگر چین کا موقف ہے کہ اگر ضرورت پڑی تو اس جزیرے کو کسی بھی وقت طاقت کے ذریعے دوبارہ حاصل کر لیا جائے گا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube