Monday, May 16, 2022  | 1443  شوّال  14

انڈونیشیا، طیارے کا بلیک باکس نہ مل سکا

SAMAA | - Posted: Jan 12, 2021 | Last Updated: 1 year ago
SAMAA |
Posted: Jan 12, 2021 | Last Updated: 1 year ago
[caption id="attachment_2156479" align="alignnone" width="800"] فوٹو: بی بی سی[/caption]

انڈونيشيا میں حادثے کا شکار ہونے والے سری ویجایا ایئر کے طیارے بوئنگ 737-500 کے فلائٹ ريکارڈرز کی تلاش کے ليے اضافی عملہ تعينات کرديا گيا ہے۔

جہاز گزشتہ ہفتے جکارتہ ایئر پورٹ سے پرواز بھرنے کے بعد جاوا کے سمندر میں گر کرتباہ ہوگیا تھا۔ جس کی تلاش کیلیے ساڑھے 3ہزار سے زائد اہلکاروں نے اس طيارے کے فلائٹ ريکارڈرز تلاش کرنے کا کام شروع کیا تھا۔

ريسکيو حکام نے اب تک انسانی اعضاء اور جہاز کے کئی ٹکڑے برآمد کر ليے ہيں جبکہ بليک باکس کی نشاندہی کی جاچکی ہے تاہم اب تک برآمد نہیں ہوا ہے۔

مقامی بجٹ ايئرلائن سری ویجایا ایئر کا بوئنگ 737 طرز کا يہ طيارہ جکارتہ سے اڑنے کے چار منٹ بعد ہی سمندر ميں گر کر تباہ ہو گيا تھا۔

واضح رہے کہ طيارے میں مسافروں اور عملے کے ارکان سمیت کُل 62 افراد سوار تھے۔

اس سے قبل سال 2014ء ميں ملائیشیا کے دارالحکومت کوالالمپور سے اڑان بھرنے والی فلائٹ ايم ايچ 370بھی اسی طرح حادثے کا شکار ہوگئی تھی، جس میں 239 مسافر سوار تھے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube