Monday, May 16, 2022  | 1443  شوّال  14

ایران: یوکرینی جہاز گرانے میں ملوث 6 اہلکار گرفتار

SAMAA | - Posted: Jun 11, 2020 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Jun 11, 2020 | Last Updated: 2 years ago

ایران نے یوکرین کے مسافر جہاز کو میزائل حملے میں مار گرانے میں ملوث چھ اہلکاروں کو حراست میں لینے اور ان کے خلاف قانونی کارروائی جبکہ امریکا کو معلومات فراہم کرنے والے ایک جاسوس کو سزائے موت دینے کا اعلان کیا ہے۔

ایرانی عدلیہ کے ترجمان غلام حسین اسماعیلی نے منگل کو میڈیا بریفنگ میں بتایا کہ ہوائی جہاز کو میزائل حملے میں مار گرانے میں ملوث چھ افراد کو حراست میں لے لیا ہے جبکہ جنرل سلیمانی کے بارے میں امریکا کو معلومات فراہم کرنے والے ایک جاسوس کو پھانسی دی جائے گی۔

ایران نے اپریل میں اعلان کیا تھا کہ مسافر جہاز گرانے کے معاملے میں ایک شخص کو گرفتار کیا گیا ہے اور متعدد دیگر افراد کو ملزم کے طور پر طلب کیا گیا ہے۔

گزشتہ روز عدالتی ترجمان نے کہا کہ اس واقعے کی تحقیقات ملٹری پراسیکیوٹر کے دفتر کی ایک خصوصی شاخ کو سونپی گئی ہیں جبکہ ابھی متاثرہ 70 خاندانوں نے تک تفتیش کار کو درخواستیں جمع کرائی ہیں۔

عدالتی ترجمان نے حراست میں لیے گئے افراد کی شناخت اور تفتیش کے نتائج کے بارے میں مزید تفصیلات نہیں بتائیں۔

انہوں نے کہا کہ پاسداران انقلاب کے ملک سے باہر آپریشنز کے سربراہ جنرل سلیمانی کی نقل و حرکت کے بارے میں امریکا کو معلومات فراہم کرنے والے ایک جاسوس کو بھی عدالت نے سزائے موت سنائی ہے مگر انہوں نے سزا پر عملدرآمد کی تاریخ نہیں بتائی۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube