Thursday, May 19, 2022  | 1443  شوّال  17

نیوزی لینڈ میں2 مساجد پر حملہ، 6 پاکستانی لاپتہ

SAMAA | - Posted: Mar 15, 2019 | Last Updated: 3 years ago
SAMAA |
Posted: Mar 15, 2019 | Last Updated: 3 years ago
[caption id="attachment_1485137" align="alignnone" width="640"] (Photo by Tessa BURROWS / AFP)[/caption]

نیوزی لینڈ میں 2 مسجد پر فائرنگ کے واقعہ کے بعد 6 پاکستاني اب بھي لاپتہ ہيں ۔

نیوزی لینڈ میں پاکستانی ہائی کمیشن کی ویب سائٹ کے مطابق کرائسٹ چرچ حملے کے بعد چھ پاکستانی اب بھی لاپتہ ہیں ، لاپتہ ہونے والے پاکستانیوں میں ہارون محمود ، محمد زاہد ، محمد سہیل شاہد ، سید اریب احمد ، سید جہاںداد علی اور طلحہ نعیم کے نام شامل ہے ۔

تاہم ڈپٹي ہائي کمشنر پاکستان سيد معظم شاہ نے سماء سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ نیوزی لینڈحملہ میں5پاکستانی لاپتہ ہیں لیکن اسپتال کی طرف سے حتمی فہرست جاری نہیں کی گئی۔

مزید پڑھیے : کرائسٹ چرچ،2مساجد پر حملہ،49سے زائد نمازی شہید،متعدد زخمی

سیدمعظم شاہ نے کہا کہ زخمیوں کو مختلف اسپتالوں میں منتقل کیا گیا ہے جبکہ زخمی کس حال میں ہیں بتایا نہیں جارہا۔

دریں اثنا پاکستانی سفارتخانے کے ترجمان محمد فیصل نے ٹوئٹ کی جس میں انہوں نے بتایا کہ نیوزی لینڈ میں ہونے والے حملے میں 4 پاکستانی زخمی ہوئے ہیں جو اسپتال میں زیر علاج ہیں ۔

واضح رہے کہ آج نیوزی لینڈ میں 2 مسجد پر فائرنگ کے واقعہ میں 49 افراد جاں بحق، جبکہ متعدد زخمی ہوگئے۔ مسجد میں نماز کیلئے موجود بنگلہ دیشی کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی محفوظ رہے۔

مزید پڑھیے : کرائسٹ چرچ مسجد پر حملہ کرنے والا کون تھا ؟

نیوزی لینڈ کی وزیراعظم کے مطابق آج کا دن ملک کی تاریخ کا سیاہ ترین دن ہے، حملے کے بعد علاقے میں موجود گرجا گھر اور تعلیمی اداروں کو بھی بند کردیا گیا ہے۔

نیوزی لینڈ پولیس کے مطابق کرائسٹ چرچ مسجد پر حملہ کرنے والے ملزم کی عمر 28 سال ہے اور وہ آسٹریلوی شہری ہے۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube