Tuesday, May 17, 2022  | 1443  شوّال  16

مقبوضہ کشمیر میں ہڑتال 24 ویں رو ز میں داخل، کارگل میں 2 فوجی ہلاک

SAMAA | - Posted: Aug 1, 2016 | Last Updated: 6 years ago
SAMAA |
Posted: Aug 1, 2016 | Last Updated: 6 years ago

  سرینگر : مقبوضہ کشمیر کے اضلاع سرینگر، پلوامہ، کولگام، اسلام آباد، شوپیاں، بڈگام، کپواڑہ، بارہ مولہ اور گاندر بل میں مسلسل 24 ویں روز بھی کرفیو نافذ رہا، ساتھی ہی سخت پابندیوں کے باوجود احتجاجی ہڑتال بھی جاری رہی۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق سرینگر اور وادی کے دیگر شہروں و قصبوں کے اندرونی علاقوں میں بہت سے بازار حریت رہنماﺅں کے پروگرام کے مطابق شام کو کھلے رہے، حریت رہنماﺅں نے لوگوں سے شام 6 بجے کے بعد سے معمول کی سرگرمیاں بحال کرنے کی اپیل کی تھی، پابندیوں کے باوجود سرینگر کے کئی علاقوں اور سرینگر جموں و سرینگر لیہ شاہراﺅں پر بعض پرائیویٹ گاڑیاں چلتی ہوئی دکھائی دیں۔

kashmirs

کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی اور دیگر حریت رہنماﺅں میر واعظ عمر فاروق، یاسین ملک اور شبیر احمد شاہ مسلسل گھروں اور تھانوں میں غیر قانونی طور پر نظربند رہے۔ انہوں نے احتجاجی پروگرام میں جمعہ تک توسیع کردی ہے۔

ادھر ضلع لداخ کے علاقے کارگل میں بارودی سرنگ کے ایک دھماکے میں 2 بھارتی فوجیوں صوبیدار بساپا پٹیل اور ایک سپاہی ہلاک ہوگئے، ضلع راجوری کے علاقے منج کوٹ میں 43 راشٹریہ رائفلز سے تعلق رکھنے والا ایک بھارتی فوجی اپنے کیمپ کے قریب مردہ حالت میں پایا گیا۔ اے پی پی

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube