Tuesday, May 17, 2022  | 1443  شوّال  15

لگژری شادیوں کی تقریب کو آسان بنائیں

SAMAA | - Posted: Oct 4, 2018 | Last Updated: 4 years ago
SAMAA |
Posted: Oct 4, 2018 | Last Updated: 4 years ago

کراچی کے مقامی ہوٹل میں کاربن ایونٹس کی سی ای او سارہ چھاپرا کی جانب سے ویڈنگ اٹلئر 2018 کا انعقاد کیا گیا، جہاں شادی کی تقریب کیلئے عروسی لباس ، ڈیکوریشن ، ميچنگ جولری سمیت تمام چیزوں کی نمائش کی گئی ۔

سماء ڈیجیٹل سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے ایونٹ آرگنائزر سارہ چھاپڑہ کا کہنا تھا کہ بیس سال اس پیشہ سے وابستہ ہیں انہوں نے بتایا کہ ہر کوئی چاہتا ہے کہ اس کی شادی شیان شان طریقے ہو اور زندگي کے اہم دن پر وہ دوسروں سے منفرد نظرآئے چاہے شادی کارڈ ہوں ، جوڑے ، کھانا ، ڈیکوریشن تمام چیزیں منفرد چیزیں چاہیے ہوتی ہے ۔

شادی بیاہ میں دلہا، دلہن کی خریداری کیلئے ہر کسی کو مشکلات کا سامنا رہتا ہےاور اپنے مصروف ترین اوقات میں سے شاپنگ اور تیاریوں کیلئے وقت نکالنا کسی پہاڑ توڑنے سے کم نہیں ہوتا۔

سارہ چھاپڑا نے بتایا کہ ان کا فوکس کام کرنے والی خواتین پر ہوتا ہے کام کرنے والی خواتین کو اس بات کی پریشانی رہتی ہے کہ وہ اپنی شادی پر کس طرح تیاری کریں، شادی کی تقریب کیلئے کسی بھی چیز کی ضرورت ہو تو وہ یہاں مل جائے گی، ہمارے پاس ہر پیشے کے ماہر سے ماہر ترین لوگ موجود ہیں۔

ہم شادی کے انتظامات لگثری انداز میں کرنے کی ہر کوشش کرتے ہیں میرے کوشش ہوتی ہے کہ لوگوں کو زیادہ سے زیادہ ڈسکاونٹ دیا جائے ، خاص طور پر وہ لوگ جن کے پاس وقت کی قلت ہوتی ہے وہ باآسانی اپنے سارے معاملات اعلی شان طریقے سے کرسکتے ہیں۔

انہوں نے مزید بتایا کہ ہم اپنے پاس آنے والے ہر کلائنٹ سے پوچھتے ہیں کہ آپ کون ہیں کیا چاہتے ہیں خاندان میں کتنے افراد ہیں اور شادی کی تقریب کیلئے ہمارا انتخاب کیوں کرنا چاہتے ہیں۔

نمائش میں مشہر ڈیزائنر دیپک پروانی نے بھی اپنے عروسی لباس پیش کئے، ان کا کہنا تھا کہ ہم ساوتھ اشین ملک میں رہتے ہیں اور شادی کی تقریب یہاں کے بڑے ایونٹس میں سے ایک ہے، انہوں نے کہا وقت کے ساتھ ساتھ اور سوشل میڈیا کے بعد لوگوں کے شوق اور مزاج میں تبدیلی آئی ہے اب لوگ فلموں سے متاثر ہوتے ہیں اور اسی طرح اپنی شادی قریب کرنے کے خواہشمند ہوتے ہیں ۔

ڈیزائنر محسن سعید کا کہنا تھا کہ مہنگی چیز ایک بار خریدی جاتی جسے آپ کئی بار استعمال کرسکتے ہیں بعض لوگ مہنگی چیزیں اس لیے نہیں خریدتے کیونکہ وہ انہیں ایک بار استعمال کرنی ہوتی جو بہت غلط ہے آپ اسی فیشن اور ڈیئزائن کا انتخاب کریں جسے آپ کئی بار زیر استعمال لاسکیں ۔

ایونٹ اورگنائزر سارہ چھاپڑا کا کہنا تھا کہ ہر کسی کی اپنی شخصیت ہوتی ہے چاہیے کوئی کسی بھی جگہ رہتا ہو اسے خواہش رکھنے کا پورا حق ہے کہ اس کی شادی اعلیٰ شان طریقے ہو انہوں مائی بگ فیٹ کراچی مہم کا اعلان کیا جس کے تحت ایک شادی کے خواہش مند جوڑے کی شادی کی تمام تر تیاری کے بطور تحفہ سرانجام دی جائیں گی ۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube