Tuesday, May 17, 2022  | 1443  شوّال  16

دل گداز آواز کے مالک اخلاق احمد کو بچھڑے15برس بیت گئے

SAMAA | - Posted: Aug 4, 2014 | Last Updated: 8 years ago
SAMAA |
Posted: Aug 4, 2014 | Last Updated: 8 years ago

اسٹاف رپورٹ

لاہور: دل گداز آواز کے مالک گلوکار اخلاق احمد کو دنیا سے کوچ کئے پندرہ  برس بیت گئے مگر ان کی مدھر آواز آج بھی دلوں کو گرمائے ہوئے ہے۔
 
گلوکار اخلاق احمد آٹھ مئی انیس سو چھیالیس کو دہلی میں پیدا ہوئے، قدرت نے اس قدر سريلی آواز عطا کی  کہ جو انھیں سُنتا متاثر ہوئے بنا نہ رہ پاتا۔ اخلاق احمد نے ساٹھ کی دہائی میں گلوکار مسعود رانا اور اداکار ندیم کے ساتھ چھوٹے چھوٹے اسٹیج پروگرامز سے اپنے فنی سفر کا آغاز کیا۔ موسیقار لال محمد اقبال نے انہیں انیس سو بَہتر میں اپنی فلم پازیب میں گانے کا موقع دیا تو اخلاق احمد نے اپنی قابلیت کا لوہا منوا ليا۔

اخلاق احمد کو روبن گھوش، سہیل رعنا، نثار بزمی، ناشاد اور کمال احمد جیسے نامور موسیقاروں کا ساتھ میسر آیا توان کی آواز سرحد کے دونوں طرف گونجنے لگی۔

اخلاق احمد کو ان کے فنی سفر کے دوران  کئی اعزازات سے نوازا گيا، وہ اپنے کیرئیر کے عروج میں خون کے سرطان جیسے مہلک مرض میں مبتلا ہوئے اور چار اگست انیس سو ننانوے کو اس جہان فانی سے کوچ کرگئے مگر اخلاق احمد کی آواز کا سوز و گداز آج بھی دلوں کو گرمائے ہوئے ہے۔ سماء

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube