Tuesday, May 17, 2022  | 1443  شوّال  15

ملازمت پر جانے کی سوچ اور موڈ پر اثرات، نئی سروے رپورٹ

SAMAA | - Posted: Oct 3, 2011 | Last Updated: 11 years ago
SAMAA |
Posted: Oct 3, 2011 | Last Updated: 11 years ago

اسٹاف رپورٹ
نیویارک: ملازمت پر جانے کا سوچ کر ہی بیشتر افراد کا موڈ خراب ہو جاتا ہے۔ جدید  تحقیق کے مطابق صبح اچھے موڈ کے ساتھ بیدار ہونے والے کام کے بارے میں سوچ کر ہی برہم ہو جاتے ہیں۔

امریکا کے تحقیقی ماہرین نے دنیا بھر کے چوراسی ممالک کے ساڑھے بیس لاکھ افراد کے روزمرہ کے معمولات کا ٹوئٹر پر جائزہ لیا اور بتایا کہ کام، نیند اور دن کی روشنی کا تعلق براہ راست انسانی جذبات سے ہوتا ہے اور خوشی، جوش و ولولہ، خوف،غصہ اور پریشانی کی کیفیت میں تبدیلی ہوتی ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ دو سال تک تجزیہ کے بعد دلچسپ باتین سامنے آئیں۔ بیشتر افراد موڈ آدھی رات سے علی الصباح تک بہت خوشگوار ہوتا ہے لیکن جیسے جیسے کام پر جانے کا وقت نزدیک آتا ہے کام کا سوچ کر ہی مزاج میں تبدیلی شروع ہو جاتی ہے۔

اس صورتحال کو بہتر بنانے کیلئے ماہرین کم از کم سات گھنٹے کی نیند اور کام کے دوران چند منٹ کے وقفوں کا مشورہ دیتے ہیں تاکہ ذہن اور موڈ دونوں تروتازہ رہیں۔ سماء / ایجنسیز

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
مقبول خبریں
مقبول خبریں
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube