Wednesday, May 18, 2022  | 1443  شوّال  17

درآمدات کم، برآمدات میں اضافہ ہوا، رزاق داؤود

SAMAA | - Posted: Jan 5, 2020 | Last Updated: 2 years ago
SAMAA |
Posted: Jan 5, 2020 | Last Updated: 2 years ago

وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت عبدالرزاق داؤد نے ٹویٹر پیغام میں کہا ہے کہ رواں مالی سال کی پہلی ششماہی میں درآمدات سترہ فیصد کم ہونے سے تجارتی خسارہ تیس فیصد کم ہوگیا جبکہ ملکی برآمدات تین اعشاریہ دو فیصد بڑھ کر ساڑھے گیارہ ارب ڈالر سے تجاوز کر گئی ہیں۔

ٹوئٹر پر اپنے بیان میں عبدالرزاق داؤد نے کہا کہ درجنوں ممالک کو پاکستان کی برآمدات بڑھی ہیں اور نئے سال کے مثبت آغاز میں تو پاکستان نے کئی ممالک کو پیچھے بھی چھوڑ دیا ہے۔

عبدالرزاق داؤد کے مطابق جولائی سے دسمبر کے دوران ملکی برآمدات کا حجم 3.21 فیصد بڑھ کر 11.54 ارب ڈالر تک پہنچ گیا۔ جولائی تا دسمبر برآمدات میں چاول کی 56 فیصد، گوشت کی 52 فیصد اور سبزیوں کی  ایکسپورٹ 41 فیصد بڑھ گئی۔

مچھلی سمیت سی فوڈ کی برآمد میں 23 فیصد، مصنوعی ریشم، سنتھیٹک ٹیکسٹائل فٹبال اور چمڑے کے جوتوں کی ایکسپورٹ میں  13 فیصد، ریڈی میڈ اور لیدر گارمنٹس میں 12 فیصد، اور آلات جراحی کی برآمدات میں 10 فیصد اضافہ ہوا۔

درآمدات 17 فیصد گر کر 23 ارب 18 کروڑ ڈالر تک رہ گئیں جس کے باعث تجارتی خساہ تقریباً 31 فیصد کم ہوکر 11.64 ارب ڈالر رہ گیا۔ البتہ موبائل فونز کی درآمد 69 فیصد بڑھ کر ساڑھے 61 کروڑ ڈالر سے تجاوز کرگئی۔ الیکٹریکل مشینری کی امپورٹ 48 فیصد جبکہ پیٹرولیم اور گیس کی امپورٹ میں 34 فیصد اضافہ ہوا۔

رپورٹ کے مطابق گزشتہ چھ ماہ میں بھارت سے درآمدات میں 64 فیصد کمی آئی اور دواؤں سمیت صرف 27 کروڑ 39 لاکھ ڈالر کا سامان منگوایا گیا۔

WhatsApp FaceBook
تازہ ترین
 
 
 
 
 
 
 
 
Facebook Twitter Youtube